شہید ایڈوارڈو آنیلی
پوستر شهید ادواردو آنیلی به زبان اردو / دستاویز فلم اطالوی شہید ایڈوارڈو آنیلی کی زندگی کا سفر

ادواردو تنھا غیر ایرانی تھے کہ جن کی پیشانی کو امام خمینی نے چوما۔

به گزارش رهیافتگان (پایگاه جامع مبلغین و تازه مسلمانان ) شہید ادواردو آنیلی اٹلی کے مشہور ارب پتی سینٹر جووآنی آنیلی کا اکلوتا بیٹا اور وارث تھا.اس کی والدہ ایک یہودی شہزادی اور والد اٹلی کا طاقت ور ترین شخص تھا۔ اس کے خاندان کا سالانہ منافع 60 ارب ڈالر تھا یعنی ایران میں آئل کی آمدنی سے تین گنا زیادہ. جن میں لامیورگینی، لانچیا،آلفارمو،کچھ صنعتی کارخانہ، نجی بینک، فیشن اور کپڑے کی کمپنیاں ، لاستامپا نامی اخبارات ، کوریرہ دلاسرا اور یوونتوس فوٹبال کلب آنیلی کے خاندان کی ملکیت ہے۔لیکن ادواردو جو کہ ادیان و فلسفہ میں ڈاکٹریٹ کرنے کے لیے امریکا کی یونیورسٹی پرینستون میں تھا کہ قرآن مجید کا مطالعہ اور اس پر تحقیق کرتے ہوئے مسلمان اور شیعہ ہو گیا۔جب اس پر حقیقت اشکار ہوئی تو اُس نے اس راہ پر تقیہ سے بھی کام نہ لیا جس کی وجہ سے بہت زیادہ رنج و اندو کا سامنا کرنا پڑا۔برین واشنگ کرنے کے لیے تین بار ذہنی ہسپتال میں داخل رہے، سخت اقتصادی پابندیوں اور طرح طرح کی تھمتیں)
آخر کار 15 نومبر 2000 کو شہید کر دیا گیا۔ ادواردو تنھا غیر ایرانی تھے کہ جن کی پیشانی کو امام خمینی نے چوما۔

معرفی شهید ادواردو آنیلی به دیگر زبانها را اینجا ببینید

 

به اشتراک بگذارید :

دیدگاه

لطفا دیدگاه خودتون رو بیان کنید: